Thursday , May 23 2019
ہوم > کالم > محبت میں بے وفائی اوردھوکہ دینےوالوں کو سزاکی ضرورت۔۔۔اسماءاسلم

محبت میں بے وفائی اوردھوکہ دینےوالوں کو سزاکی ضرورت۔۔۔اسماءاسلم

نہ صرف پاکستان ، بلکہ پوری دنیامیں اصل چیز کے بدلے نقل چیز فراہم کرنے والے کو دھوکہ باز کہا جاتا ہے اور اس کے خلاف قانونی کارروائی کی جاتی ہے۔ محبت کی پینگیں کسی اور سے بڑھانا اور شادی کسی اور سے کرنے والے بھی دھوکہ باز اور جعل ساز ہیں۔
پاکستان میں موبائل فونز کے استعمال میں اضافے کی وجہ سے ہر عمر کے لوگوں کی آپس میں دوستیاں ہو رہی ہیں۔ ساتھ ساتھ ناکا م محبت کی داستانوں میں بھی دن بدن اضافہ ہوتا جا رہا ہے۔ نوجوان نسل کو برا بھلا کہہ کر اصل مسئلے سے توجہ ہٹا لی گئی ہے۔ حقیقت یہ ہے کہ کم عمر اور بڑی عمر کے مرد حضرات سادہ لوح لڑکیوں کو شادی کے خواب دکھا کر ان کی عزتوں کے ساتھ کھیل رہے ہیں۔ آئے دن لڑکیوں کی
خود کشیوں کی خبریں بھی میڈیا میں گردش کرتی رہتےہیں جو محبت میں دھوکہ کھانے کا نتیجہ ہوتی ہیں۔ پاکستان میں محبت کے نام پہ صنف نازک کی عزتوں سے کھیلنا اور انکے ارمانوں کو روندنا عام ہوتا جا رہا ہے۔
اس وقت ایسے قانون کی اشد ضرورت ہے جو خواتین کو محبت میں جعل سازی کرنے والوں کو سزا دے کر عبرت کا نشان بنا دے اور صنف نازک بھی اپنے ارمانوں کے قتل کرنے والے دھوکہ بازوں کو انکی منزل تک پہنچا سکیں۔

یہ بھی دیکھیں

دوسروں کے لیے گڑھا کھودنے والے چوہدری نثار کیسے اس گڑھے میں خود گر گئے ؟ جاوید ہاشمی اور چکری کے چوہدری کی دیرینہ مخالفت کے حوالے سے تہلکہ خیز انکشافات

لاہور (ویب ڈیسک) آثار تو یہی بتا رہے ہیں کہ شریف خاندان پاکستانی سیاسی اُفق …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *