Sunday , December 16 2018
ہوم > پاکستان > بریکنگ نیوز : پورے بھارت کے منہ پر تھپڑ ۔۔۔۔عمران خان کا جگری یار ہر رکاوٹ عبور کر کے پاکستان پہنچ گیا

بریکنگ نیوز : پورے بھارت کے منہ پر تھپڑ ۔۔۔۔عمران خان کا جگری یار ہر رکاوٹ عبور کر کے پاکستان پہنچ گیا

لاہور (ویب ڈیسک) کرتار پور راہداری کے سنگ بنیاد کی تقریب میں شرکت کے لیے بھارتی وفد پاکستان پہنچ گیا۔ سابق بھارتی کرکٹر اور سیاست دان نوجوت سنگھ سدھو کی قیادت میں بھارتی وفد واہگہ بارڈر کے راستے پاکستان پہنچے جہاں پنجاب رینجرز کے حکام نے ان کا استقبال کیا۔

وزیراعظم عمران خان کل نارووال کے قریب کرتار پور راہداری کا سنگ بنیاد رکھیں گے جب کہ تقریب میں بھارتی وفد سمیت پاکستان میں موجود سکھ یاتری بھی تقریب میں شرکت کریں گے۔ پاکستان کی تجویز پر نریندر مودی حکومت نے کرتار پور سرحد تک اپنی حدود میں راہداری بنانے کی منظوری دی، اس سے قبل پاکستان نے بھارت کو پیشکش کی تھی کہ سکھ یاتریوں کو بغیر کسی دشواری کرتارپور آنے کے لیے پاکستان راضی ہے، بھارت بھی اس کی اجازت دے۔نوجوت سنگھ پاکستان میں 3 روز قیام کریں‌گے.دوسری جانب ایک خبر کے مطابق پاکستانی حکومت کی جانب سے فیصلہ کیا گیا ہے کہ وہ 28 نومبر کو کرتار پور بارڈر کھولے گا اور اس حوالے سے ایک پرشکوہ تقریب کا اہتمام کیا جائے گا جس میں دونوں ممالک کے اعلٰی اور حکومتی حکام شرکت کریں گے۔وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے اس حوالے سے ٹوئیٹ کی ہے۔ اس ٹوئیٹ میں انہوں نے بھارتی وزیر خارجہ شسما سوراج، وزیر اعلیٰ بھارتی پنجاب کیپٹن امریندر سنگھ اور نوجوت سنگھ سدھو کو باقاعدہ دعوت دی ہے کہ وہ کرتار پور بارڈر کھولنے کی افتتاحی تقریب میں شرکت کریں دوسری جانب بھارتی وزیراعلیٰ پنجاب ارمندر سنگھ نے محبت کا جواب محبت سے دینے کی بجائے بھارتی فوجیوں کی اموات اور دہشتگردانہ واقعات کو بنیاد بنا کر پاکستان آنے سے انکار کر دیا ہے انکا کہنا تھا کہ گردوارا کرتار پورمیں حاضری دینا ہمیشہ سے میرا خواب رہا اور مجھے شاہ محمود قریشی کی جانب سے بھیجا گیا دعوت نامہ ٹھکرانے پر افسوس ہورہا ہے۔ 


یہ بھی دیکھیں

خواجہ برادران کو بڑا جھٹکا ۔۔۔۔ نیب نے سابق وزیر ریلوے کےانتہائی قریبی عزیز کو شامل تفتش کرنے کا فیصلہ کر لیا

لاہور(ویب ڈیسک) نیب لاہور نے پیراگون ہائوسنگ سوسائٹی میں گرفتار خواجہ سعد رفیق کی اہلیہ …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *