Sunday , December 16 2018
ہوم > پاکستان > خان صاحب : انڈوں اور چوزوں سے کچھ نہیں ہوگا ، اگر تبدیلی لانی ہے تو ہنگامی بنیادوں پر یہ 10 اقدامات اٹھاؤ ، صف اول کے صحافی نے تجاویز پیش کردیں

خان صاحب : انڈوں اور چوزوں سے کچھ نہیں ہوگا ، اگر تبدیلی لانی ہے تو ہنگامی بنیادوں پر یہ 10 اقدامات اٹھاؤ ، صف اول کے صحافی نے تجاویز پیش کردیں

لاہور (ویب ڈیسک) عشرے بھر کی یہ تاریخ نئے پاکستان والی عمران حکومت کیلئے اسباق سے بھری پڑی ہے، جس کے لئے گڈگورننس کے چند نسخے پیش خدمت ہیں۔ ٭…فوری طور پر ہنگامی بنیاد پر ملک گیر، ای گورننس کیلئے پبلک سروس اور اطلاعات کے نظام کو رائج کرنے کیلئے سافٹ وئیر ڈویلپمنٹ کی منصوبہ بندی کی جائے

نامور کالم نگار ڈاکٹر مجاہد منصوری اپنے ایک کالم میں لکھتے ہیں ۔۔۔۔۔۔ اور 2020ءکے آغاز سے ملک بھر میں تمام تر انتظامی امور، ای گورننس کی چھتری میں انجام دیئے جائیں۔ انتہائی بنیادی ضرورتوں کیلئے عوام کے دفاتر میں چکر پھیرے ختم کر کے درخواست گزاری اور قدم بہ قدم اپ ڈیٹ سے آگاہی کا اہتمام آن لائن ہو۔ کاموں کے لئے انتظامیہ کو ٹائم بائونڈ کیا جائے اور ترقیاتی منصوبوں کی تمام تر اطلاعات ویب سائٹس پر موجود ہوں، حتی کہ ترجیحات اور اخراجات میں ترامیم کی بھی۔ ٭…ملک میں فوری طورپر اسکول ایج کے اسکولوں سے باہر بچوں کی رجسٹریشن کرانے کا ملک گیر آپریشن خود وفاقی حکومت تعلیمی ایمرجنسی نافذ کر کے خود کر کے، تمام تر ڈیٹا، انہیں اسکولنگ میں ڈالنے کا منصوبہ اور حکمت عملی صوبائی حکومتوں کے حوالے کر کے انہیں قانوناً عملدرآمد کا پابند کرے۔٭…بڑے بڑے ٹیکس چوروں سے ٹیکس کی وصولی کو یقینی بنانے کے لئے قابل عمل قانون سازی کی تجاویز ماہرین قانون سازی سے تیار کرائی جائیں۔٭…صحت عامہ کا معیار بلند کرنے کے لئے علاج معالجے کی سہولتیں بڑھانے کے ساتھ بیماریوں سے محفوظ رہنے کے لئے ملک گیر آگاہی کی مہمات بذریعہ میڈیا، ترقیاتی ابلاغ کے اصولوں پر شروع کی جائیں۔

٭…بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کی بھاری رقوم غربا کو ماہانہ تقسیم کرنے کے بجائے اس کا رخ دیہات میں مائیکرو اکانومی کے انکم جینریٹنگ منصوبوں کی طرف موڑ دیا جائے اور شہر میں ’’پناہ گاہوں‘‘ میں اضافہ کردیا جائے۔٭…تنخواہوں میں اضافہ کر کے نچلی سطح پر سرکاری دفاتر میں رشوت ستانی پر قابو پانے کے لئے ثبوت جمع کرنے کے لئے شہریوں کو ترغیب دی جائے۔٭…واٹر مینجمنٹ اور آبادی پر کنٹرول کے ماہرین کو ہر دو موضوعات پر ملکی وسائل سے بہتری لانے کے لئے، سفارشات کی تیاری کے لئے انگیج کیا جائے۔٭…توسیع زراعت اور لیڈی ہیلتھ ورکرز سسٹم کو ازسرنو منظم کرنے کا کام متعلقہ وزارتوں اور صوبائی محکموں، دونوں کو بیک وقت سونپا جائے۔٭…برآمدات بڑھانے کیلئے، سفارتخانوں میں اہل کمرشل اتاشی تیار کرنے کیلئے سمندر پار پاکستانیوں کو ترغیبات دی جائیں۔ خارجہ پالیسی کے اہداف حاصل کرنے کیلئے مختلف موضوعات کے حوالے سے ٹریک ٹو ڈپلومیسی کا دائرہ بڑھایا جائے۔٭…حکومت ملک میں پھیلتی میڈیا انڈسٹری کے تحفظ اور فروغ کے لئے ابلاغی اداروں کے مالکان اور صحافی تنظیموں کے ساتھ مکالمے کا اہتمام کرے۔یہ سب کچھ ملکی وسائل سے ہوسکتا ہے۔ اس کے لئے نہ آئی ایم ایف کے پاس جانے کی ضرورت ہے نہ دوست ملکوں کے دروازوں پر دستک دینے کی۔(

یہ بھی دیکھیں

خواجہ برادران کو بڑا جھٹکا ۔۔۔۔ نیب نے سابق وزیر ریلوے کےانتہائی قریبی عزیز کو شامل تفتش کرنے کا فیصلہ کر لیا

لاہور(ویب ڈیسک) نیب لاہور نے پیراگون ہائوسنگ سوسائٹی میں گرفتار خواجہ سعد رفیق کی اہلیہ …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *