17

تصویر میں نظر آنے والی مراکشی لڑکی دراصل کون ہے اوراسکی پاکستان سے اتنی محبت کی وجہ کیا ہے؟ جان کر آپ بھی اِسے داد دیئے بنا نہیں رہ سکیں گے

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) سلمیٰ المرابط (Salma El Morabet)نامی یہ لڑکی مراکش کی شہری ہے لیکن وہ پاکستان کی محبت میں کچھ یوں گرفتار ہوئی کہ سن کر یقین کرنا مشکل ہو جائے۔ ویب سائٹ ’پڑھ لو‘ کے مطابق ابتدائی طور پر سلمیٰ فیس بک پر کچھ پاکستانیوں کی دوست بنی۔اس نے ’Bookay‘ نامی ایک فیس بک

گروپ جوائن کیا جو پاکستانی لائف سٹائل کے متعلق تھا۔ یہیں سے سلمیٰ کی پاکستان سے محبت کا آغاز ہوا۔ اس نے پاکستانی شہریوں کے ساتھ فیس بک پر دوستی شروع کر دی اور اردو سیکھنے کی سعی کی لیکن مشکل یہ تھی کہ سلمیٰ صرف عربی جانتی تھی اور تمام پاکستانی اردو اور انگریزی۔ تاہم سلمیٰ کو پاکستانی ثقافت سے اس قدر لگاﺅ ہو چکا تھا کہ اس نے اردوسیکھنے کے لیے پہلے انگریزی سیکھی اور پھر اس کے ذریعے پاکستانیوں کے ساتھ گفتگو کرنے کے قابل ہو کر اردو سیکھی۔ اب وہ انگریزی اور اردو دونوں زبانیں خوب روانی کے ساتھ بولتی ہے۔ڈیجیٹل میڈیا پروفیشنل سلمیٰ المرابط کی پاکستان کے ساتھ محبت اس وقت مضبوط ہوئی جب اس نے بخوبی اردو سیکھ لی اوراس کے ذریعے اسے پاکستانی ادب اور ثقافت کو کماحقہ جاننے کا موقع ملا۔ اب وہ گزشتہ پانچ سال سے پاکستان آنے کی منصوبہ بندی کر رہی تھی لیکن ہر بار کوئی نہ کوئی مشکل آڑے آ جاتی۔ گزشتہ سال وہ بھارت آئی جہاں سے اسے پاکستان آنا تھا لیکن بھارت میں وہ جب اپنے کچھ فیس بک فرینڈز کو پہلی بار ملی تو کچھ ایسے واقعات رونما ہوئے کہ سلمیٰ کو بھارت سے پاکستان آنے کی بجائے واپس مراکش لوٹنا پڑ گیا۔ تاہم رواں سال 26جنوری کو سلمیٰ کی پاکستان آنے کی کوششیں کامیاب ہوئیں اور وہ کراچی پہنچ گئی۔ جہاں فیس بک گروپ Bookayکے اراکین نے اس کا استقبال کیا۔ سوشل میڈیا پر سلمیٰ کی پاکستان آمد پر ایسی ہلچل مچی کہ #ElmoKaPakistan کا ٹرینڈ سوشل میڈیا پر بہت مقبول ہوا۔ پھر سلمیٰ کراچی سے اسلام آباد پہنچی جہاں معروف میزبان توثیق حیدر نے اسے اپنے مارننگ شو میں بھی بطور مہمان بلایا اور اس کا انٹرویو کیا۔ اس انٹرویو میں سلمیٰ کا کہنا تھا کہ ”پاکستان کا کلچر مراکش کے کلچر سے بہت مشابہہ ہے۔ پاکستان میں شادیوں پر جس طرح مہندی، بارات اور ولیمہ جیسی روایات ہیں مراکش میں بھی بالکل ایسی ہی ہیں۔تاہم ان کے نام مختلف ہیں۔ “ سلمیٰ نے بتایا کہ اسے پاکستانی ادب، کلاسیقی موسیقی اور فیض احمد فیض کی شاعری بہت پسند ہے۔ اپنے اس دورے کے دوران سلمیٰ نے کراچی، لاہور، اسلام آباد، ہری پور، ٹیکسلا، بھوربن، مری، پشاور اور پیٹریاٹا کے دورے کیے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں