14

اسد عمر کی سب سے بڑی غلطی کیا تھی جو انکو ہٹانے کی وجہ بنی ؟ استعفیٰ کے 18 گھنٹے بعد اصل وجہ کا پتا چل گیا

اسلام آباد ( ویب ڈیسک )سابق وفاقی وزیر خزانہ سلمان شاہ نے کہاہے کہ حکومت کو آئی ایم ایف سے پروگرام میں مزید تاخیر نہیں کرنی چاہیے۔ نجی ٹی وی سے بات چیت کرتے ہوئے سابق وفاقی وزیر خزانہ سلمان شاہ نے کہا کہ حکومت کو آئی ایم ایف سے پروگرام میں مزید تاخیر

نہیں کرنی چاہیے۔اسد عمر کی جگہ فوری طور پر نیا وزیرخزانہ لگانا ہوگا کیونکہ آئی ایم ایف سے پروگرام آخری مرحلے میں ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے خود ہی آئی ایم ایف کے پاس جانے میں تاخیر کی۔ پہلے حکومت کا خیال تھا کہ آئی ایم ایف کے پاس نہیں جانا چاہیے۔ جب انہوں نے مالی خسارہ دیکھا تو پھر انہوں نے آئی ایم ایف کے پاس جانے کا فیصلہ کیا۔ اب انہیں آئی ایم ایف سے فوری طور پر معاملات طے کرلینے چاہئیں کیونکہ تاخیر کی وجہ سے ملکی معیشت کو مزید نقصان پہنچنے کا اندیشہ ہے۔ دوسری جانب مسلم لیگ ن کے رہنما اور سابق وزیر خزانہ اسد عمر کے بھائی محمد زبیر نے کہاہے کہ عمران خان کو معیشت کی کوئی سمجھ بوجھ ہی نہیں تھی ، ان کی جانب خزانے کی کنجی اسد عمر کوپکڑا دی گئی اور اسد عمر اپنی پالیسیاں لے کر چل رہے تھے لیکن ایک ٹکراﺅ کے بعد دوسرا ٹکراﺅ پیدا ہورہاتھا ۔نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے محمد زبیر نے کہا کہ عمران خان کو معیشت کی کوئی سمجھ بوجھ ہی نہیں تھی ، ان کی جانب خزانے کی کنجی اسد عمر کوپکڑا دی گئی اور اسد عمر اپنی پالیسیاں لے کر چل رہے تھے لیکن ایک ٹکراﺅ کے بعد دوسرا ٹکراﺅ پیدا ہورہاتھا ، اصل میں عمران خان نے عوام کوجو خواب دکھائے تھے ، وہ پورے نہیں ہورہے تھے ۔انہوں نے کہا کہ اسد عمر ایسے سیاستدان ہیں جن کو پاکستان کی ضرورت ہے ،

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں