Friday , May 24 2019
ہوم > پاکستان > شہر قائد سے شرمناک خبر : پرائیویٹ اسکول کی خاتون ٹیچر کو اپنے ہی شوہر کے ساتھ تعلقات لے ڈوبے ، چند روز قبل اس بدقسمت لڑکی کے ساتھ کیا انوکھا واقعہ پیش آیا ؟ نکاح کے بعد مگر رخصتی سے پہلے میل ملاپ کی اجازت دینے والے والدین کے کام کی خبر

شہر قائد سے شرمناک خبر : پرائیویٹ اسکول کی خاتون ٹیچر کو اپنے ہی شوہر کے ساتھ تعلقات لے ڈوبے ، چند روز قبل اس بدقسمت لڑکی کے ساتھ کیا انوکھا واقعہ پیش آیا ؟ نکاح کے بعد مگر رخصتی سے پہلے میل ملاپ کی اجازت دینے والے والدین کے کام کی خبر

کراچی (ویب ڈیسک) شہر قائد کے علاقہ کورنگی میں اسکول ٹیچر کی پراسرار ہلاکت کے کیس میں ایک اور موڑ پر پولیس نے متوفیہ کے اہل خانہ کو تدفین سے روک دیا ہے اور متوفیہ کی لاش کو پوسٹ مارٹم کے لئے اسپتال روانہ کر دیا ، متوفیہ کے شوہر کو شک کی بنا پر

حراست میں لے کرتفتیش شروع کردی گئی ہے ، پولیس کا کہنا ہے کہ متوفیہ کا کچھ ماہ قبل ہی عمران سے نکاح ہوا تھا جبکہ رخصتی نہیں ہوئی تھی۔ تفصیلات کے مطابق ابراہیم حیدری کےتھانے کی حدود کورنگی علی اکبر شاہ گوٹھ پاسبان چوک کے قریب واقع گھر میں نوجوان خاتون کی لاش ملی، اطلاع ملنے پر پولیس نے موقع پر پہنچ کر اہل خانہ کو تدفین سے روک دیا،اور لاش پوسٹمارٹم کے لئے جناح اسپتال منتقل کی، اسپتال میں متوفیہ کی شناخت 18 سالہ شفیقہ زوجہ عمران کے نام سے ہوئی، پولیس کے مطابق متوفیہ اسکول ٹیچر اور کچھ عرصہ قبل ہی عمران نامی شخص سے شادی ہوئی تھی، ابتدائی طور پر متوفیہ کے سسرال والوں نے پولیس کو بتایا تھا کہ متوفیہ کا اپنے شوہر سے کسی بات پر جھگڑا ہوا تھا جس سے دلبرداشتہ ہو کر اس نے زہریلی چیزکھالی ہے ، پو لیس کے مطابق 18 سالہ اسکول ٹیچر متوفیہ شفیقہ کے شوہر عمران کو شک کی بناءپر حراست میں لے لیا ہے، جس نے دوران تفتیش پولیس کو بتایا کہ اسکا تین ماہ قبل گھر والوں کی باہمی رضامندی سے متوفیہ سے نکاح ہوا تھا، جبکہ رخصتی نہیں ہوئی تھی، اور وہ گھر والوں کی اجازت سے نکاح کے بعد اکثر اوقات ملتے تھے اور اسی دوران وہ حاملہ ہوگئی تھی، پولیس کے مطابق متوفیہ کے شوہر نے پولیس کو بتایا کہ انھوں نے اسقاطِ حمل کے لئے کورنگی کراسنگ میں قائم نجی کلینک سے رابطہ کیا تھا، نجی کلینک میں اسقاط حمل کے دوران متوفیہ شفیقہ کی حالت بگڑنے پر دوسرے اسپتال منتقل کرتے ہوئےوہ جاںبحق ہوگئی ، تاہم متوفیہ کے شوہر عمران کی نشاندہی پر ابراہیم حیدری پولیس نے نجی کلینک کی اتائی ڈاکٹر عظمیٰ اور نرس فرزانہ کو بھی لے لیا ہے، جبکہ فرار ہونے والی ساتھی ڈاکٹر کی تلاش کی جارہی ہے، تاہم پوسٹ مارٹم رپورٹ آنے کے بعد ہی واقعہ کا مقدمہ درج کیاجائیگا۔

یہ بھی دیکھیں

ایک نیا ریکارڈ قائم

اسلام آباد ۔ (نیوزڈیسک) وزیر اعظم کی معاون خصوصی فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے …